واجپئی نے شادی سے بچنے کیلئے دوست کے گھر پناہ لی

کانپور .... آنجہانی وزیراعظم اٹل بہاری واجپئی نے شادی نہیں کی تھی اور نہ ہی وہ کرنا چاہتے تھے۔ جب ان پر گھر والوں نے دباﺅ ڈالا تو انہوں نے 3دن اپنے دوست کے گھر میں خود کو ایک کمرے میں بند کرلیا۔ یہ اس وقت ہوا جب انہیں علم ہوا کہ انکے والدین انکے لئے لڑکی ڈھونڈ رہے ہیں۔ یہ بات واجپئی کے دوست کے صاحبزادے وجے پرکاش نے بتائی۔1940کے عشرے میں واجپئی کانپور کے ڈی اے وی کالج میں پڑھتے تھے۔ جب انہیں معلوم ہوا کہ انکے والدین انکی شادی کا منصوبہ بنا رہے ہیں تو وہ بھاگ کر اپنے دوست گورے لال ترپاٹھی کے گھر چلے گئے۔ ان دونوں کے درمیان آر ایس ایس شاکھاکی کلاس میں دوستی ہوئی تھی۔ وجے نے بتایا کہ میرے والد ہم لوگوں کو بتایا کرتے تھے کہ اٹل جی نے اس کمرے میں اپنے آپ کو بند کیا تھا جو مہمانوں کیلئے مخصوص تھا۔ وہ 3دن تک باہر نہیں آئے۔ اٹل جی نے میرے والد سے کہا تھا کہ کمرے کو باہر سے تالا لگادیا جائے۔ جب مجھے پانی ،کھانے یا ٹوائلٹ کی ضرورت ہوگی تو میں دستک دیدیا کرونگا۔
 
 

شیئر: