’ٹیکنالوجی سے ہمارے دماغ پھٹ جائیں گے‘

پینلوپ کروز کہتی ہیں کہ ٹیکنالوجی کے استعمال سے سب کی زندگیاں متاثر ہورہی ہیں (فوٹو:اے ایف پی)
ہالی وڈ اداکارہ پینلوپ کروز نے کہا ہے کہ ٹیکنالوجی کے استعمال کی وجہ سے لوگ پریشانی کا شکار ہورہے ہیں اور وہ دن دور نہیں جب ہمارے دماغ پھٹ جائیں گے۔
خبررساں ادارے اے ایف پی کے مطابق دو بچوں کی ماں پینلوپ کروز نے کہا ہے کہ ٹیکنالوجی کے زیادہ استعمال سے نہ صرف بچے بلکہ سب متاثر ہو رہے ہیں۔
پینلوپ کروز نے کہا کہ ان کو ڈر ہے کہ کیسے ٹیکنالوجی کے استعمال سے بچوں کی دماغی صحت اور نشوونما متاثر ہو رہی ہے۔
وینس فلم فیسٹول کے موقع پر صحافیوں کے ساتھ گفتگو میں ہالی وڈ اداکارہ نے کہا ’ٹیکنالوجی کے ساتھ میری ذاتی جنگ ہے۔‘

آج کل زیادہ تر بچے باہر کھیلنے کے بجائے ویڈیو گیمز کا استعمال کر رہے ہیں (فوٹو: اے ایف پی)

ان کا کہنا تھا ’دماغی صحت سے متعلق مسائل حل کرنے کے لیے کاش ہم 90 کی دہائی میں تھوڑا اور رہ لیتے۔ ٹیکنالوجی کی وجہ سے چیزیں تیز رفتار کے ساتھ جا رہی ہے اور ہم اس کے لیے تیار نہیں ہیں۔‘
45 سالہ اداکارہ کا مزید کہنا تھا کہ ٹیکنالوجی نے بچوں کی زندگیوں، وقت اور خیالات کو مکمل طور پر گرفت میں لے لیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ ان کی باتوں کے بارے میں شاید لوگوں کو لگے کہ وہ بڑھا چڑھا کر پیش کر رہیں ہیں لیکن اس بات کی قائل ہیں کہ ’ہم لوگ ٹیکنالوجی سے ایک مختلف تعلق کے ساتھ  بڑے ہوئے ہیں۔‘
’آج کل بچے اور نوجوانوں کا رابطہ ٹیکنالوجی سے زیادہ ہے اور یہ بچوں سے کھیلنے کا وقت، بات چیت، خاندان کے ساتھ کھانا کھانے کا وقت چھین رہا ہے اور یہ وہ چیزیں ہیں جو انہیں بطور ایک بچہ سیکھنی چاہییں۔‘
اداکارہ پینلوپ کروز کا ایک آٹھ برس کا بیٹا اور چھ برس کی بیٹی ہے۔
انہوں نے کہا کہ بڑھتے ہوئے خدشات کہ ہم ’کرہ ارض کے ساتھ کیا کر رہے ہیں‘ ایک دن ہمیں پتہ چل جائے گا کہ ٹیکنالوجی نے ہمارے ساتھ کیا کیا۔

شیئر: