حرم کے باہر چھتریوں کی تنصیب موخر کیوں؟ 

صحن مطاف پر فولڈنگ چھتری کا منصوبہ ابھی تک زیر غور ہے۔ فوٹو:الیوم اخبار
مکہ میں حرم شریف کے بیرونی صحنوں میں فولڈنگ چھتریوں کی تنصیب کے کام کو موخر کر دیا گیا ہے۔ موصول ہونے والی فولڈنگ چھتری کے نمونے میں فنی خرابی کا انکشاف ہواتھا۔
فولڈنگ چھتریوں کی تنصیب کا مقصد موسم گرما میں نمازیوں کو آرام پہنچانا ہے خاص کر ماہ رمضان اور حج سیزن کے دوران جب وہاں بے پناہ رش ہوتا ہے۔

حرم مکی الشریف کے صحنوں میں چھتریوں کی تنصیب سے لاکھوں زائرین کو سہولت ہو گی ، فوٹو مکہ اخبار 

روزنامہ مکہ کے مطابق حرم مکی الشریف میں لاکھوں معتمرین اور عازمین حج کی آمد کا سلسلہ جاری رہتا ہے۔ ماہ رمضان المبارک اورحج سیزن میں حرم شریف میں بیک وقت لاکھوں افراد موجود ہوتے ہیں۔ حرم شریف کے اندرونی صحنوں میں جگہ کم ہونے کی وجہ سے لوگ بیرونی صحنوں میں نماز ادا کرتے ہیں۔

فولڈنگ چھتریاں موسم گرما میں دوپہر کو کھولی جاتی ہیں۔ فوٹو: اخبار 24 

 زائرین کی سہولت کے لیے انتظامیہ نے جامع منصوبے کے تحت حرم شریف کے بیرونی صحنوں میں بڑی، بڑی فولڈنگ چھتریاں نصب کرنے کے لیے غیر ملکی کمپنی سے معاہدہ کیا جس کے تحت کمپنی اس امر کی پابند تھی کہ وہ خصوصی طور پر تیار کی جانے والی ہائیڈرالک چھتریوں کی تنصیب سے قبل ان کا نمونہ انتظامیہ کو فراہم کرے تاکہ چھتریوں کے معیار کو دیکھ کر ان کی تنصیب کا آغاز کیا جاسکے۔
اطلاعات کے مطابق کنٹریکٹنگ کمپنی کی جانب سے موصول ہونے والے نمونے کو جب ٹیسٹ کیا گیا تو اس میں متعدد فنی خرابیوں کا انکشاف ہوا جس کے بارے میں متعلقہ کمپنی کو مطلع کر دیا گیا۔
چھتریاں نصب کرنے والی کمپنی کی جانب سے جاری رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ فنی خرابی کے انکشاف کے بعد تمام نمونے واپس کر دیے گئے ہیں تاکہ انہیں مطلوبہ معیار کے مطابق دوبارہ تیار کیاجائے۔

مسجد نبوی الشریف کے بیرونی صحنوں میں 250 فولڈنگ چھتریاں نصب ہیں۔ فوٹو:اخبار 24 

دوسری جانب حرم شریف کی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ صحن مطاف میں بڑی فولڈنگ چھتری کی تنصیب کے لیے ابھی تک کوئی حتمی فیصلہ نہیں کیا گیا۔ سوشل میڈیا پر مختلف منصوبوں کے تخیلاتی ماڈلز وائرل ہورہے ہیں جن میں کوئی حقیقت نہیں۔
واضح رہے مدینہ منورہ میں مسجد نبوی الشریف کے بیرون صحنوں میں فولڈنگ چھتریاں کافی عرصے سے نصب کی گئی ہیں۔ مسجد نبوی الشریف کے باہر صحنوں میں 250 فولڈنگ چھتریاں نصب ہیں ہر چھتری کی اونچائی 15.3 میٹر ہے۔ چھتری کھلنے پر اس کا قطر 25.5*25.5 مربع میٹر ہوتا ہے۔ ایک چھتری کا وزن 40 ٹن کے قریب ہے۔
مسجد نبوی الشریف میں فولڈنگ چھتریاں موسم گرما میں دوپہر کوکھولی جاتی ہیں جن کی وجہ سے وہاں نماز ادا کرنے والوں کو کافی آسانی ہوتی ہے۔ چھتریوں کے نیچے بیک وقت 2 لاکھ 28 ہزار افراد نماز ادا کرسکتے ہیں۔

شیئر: