جیت کے باوجود گرین شرٹس اگرمگر کی کشمکش میں مبتلا

سنہ 1992 کے ورلڈ کپ کی طرح ایک بار پھر پاکستانی ٹیم اگرمگر کی کشمکش میں مبتلا ہو گئی ہے۔
حالیہ ورلڈ کپ میں پاکستان کے لیے اگلےدونوں میچز اچھے مارجن سے جیتنا ضروری ہیں تب ہی ٹیم سیمی فائنل میں پہنچ سکتی ہے۔
بارش یا کسی ایک میچ میں شکست کے بعد ٹیم ٹورنامنٹ سے باہر ہو جائے گی۔
کیویز ٹیم سے میچ جیتنے کے بعد  پوائنٹس ٹیبل پر پاکستان کے سات پوئنٹس ہو گئے ہیں پاکستان اگر اپنے اگلے دو میچز جیت جائے اور انگلینڈ اپنے دو میچز میں سے کوئی ایک میچ ہار جائے تو سیمی فائنل میں پاکستان کی رسائی یقینی ہو جائے گی۔

واضح رہے کہ پاکستان نے اگلے دو میچز 29 جون کو افغانستان اور پانچ جولائی کو بنگلہ دیش کے ساتھ کھیلنے ہیں۔
سری لنکا بھی پوائنٹس ٹیبل پر اپنے چھ میچز کھیل کر چھ پوائنٹس حاصل کر چکا ہے اور اب ان کو اپنے تین میچز میں جنوبی افریقہ، ویسٹ انڈیز اور انڈیا کا سامنا کرنا ہے۔
جس کا مطلب ہے سیمی فائنل میں جگہ بنانے کے لیے سری لنکا کو اپنے تینوں میچز جیتنے کے ساتھ ساتھ پاکستان کی طرح انگلینڈ کی ہار کا انتظار بھی کرنا پڑے گا۔
اگر پاکستان کے اگلے دو میچز میں بارش ہوئی تو پوائنٹس ملنے سے بھی پاکستان ٹیم باہر ہو جائے گی تاہم اگر دیگر ٹیموں کے میچوں میں بارش ہوتے ہے تو پھر پوا ئنٹس ٹیبل کو دیکھ کر فیصلہ کیا جائے گا۔

شیئر: