Sorry, you need to enable JavaScript to visit this website.

پاکستان بمقابلہ نیوزی لینڈ: ’آج سکیورٹی کے مسائل بھی حل کرنے چاہییں‘‎‎

نیوزی لینڈ نے گذشتہ مہینے راولپنڈی میں ہونے والے پہلے میچ سے محض چند گھنٹے قبل سکیورٹی وجوہات کو جواز بناتے ہوئے دورہ پاکستان منسوخ کر دیا تھا۔ (فوٹو: اے ایف پی)
پاکستان میں انڈٰیا سے تاریخی فتح کا جشن ابھی جاری ہی تھا کہ کرکٹ شائقین نے پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان ہونے والے مقابلے پر تبصروں کا سلسلہ شروع کر دیا ہے۔
پاکستانی شائقین کرکٹ نیوزی لینڈ ٹیم کو’سکیورٹی کے مسئلے‘ کی بنا پر سیریز کینسل کر کے پاکستان سے جانے کا وقت یاد کرا رہے ہیں۔
انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی جانب سے جاری کیے گئے ورلڈ کپ میچ شیڈول کے مطابق منگل کو شام سات بجے پاکستان بمقابلہ نیوزی لینڈ کرکٹ میچ شارجہ میں کھیلا جائے گا۔
سوشل میڈیا پر شائقین کرکٹ پاکستان اور نیوزی لینڈ کے میچ سے پہلے ہی اس پر تبصرے کر رہے ہیں۔ جن میں کوئی نیوزی لینڈ کی سکیورٹی کا مسئلہ حل کرنے کی بات کر رہا ہے تو کوئی ان سے بدلا لینا یاد دلا رہا ہے۔ جبکہ کچھ سوشل میڈیا صارفین پاکستان کرکٹ ٹیم کو نیوزی لینڈ کے لیے شارجہ میں خطرہ قرار دیتے ہوئے انہیں میچ کینسل کرنے کا مشورہ دے رہے ہیں۔
سوشل میڈیا صارف کِرن جہانگیر نے نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کی تصویر شیئر کرتے ہوئے لکھا کہ ’انڈین کرکٹ ٹیم کی خوش فہمی دور کرنے کے بعد نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے سکیورٹی مسائل بھی حل کرنے چاہییئں۔

ٹوئٹر ہینڈ نمز پر پاکستان کے نیوزی لینڈ کے ساتھ ہونے والے میچ کے حوالے سے لکھا گیا ہے کہ ’ابھی تو ہم بدلے ہیں، بدلے ابھی باقی ہیں۔

معروف صحافی حامد میر کی جانب سے بھی اس بات یاد دہانی کرائی گئی کہ انڈیا سے جیت کے بعد اگلا میچ نیوزی لینڈ کے ساتھ ہے جو کہ زیادہ اہمیت کا حامل ہے۔
حامد میر نے ٹوئٹر پیغام میں لکھا کہ ’کسی نے مجھے پاکستانی اخبار کی ہیڈ لائن بھیجی ہے۔ اب انڈیا کو بھول جاؤ۔‘
انہوں نے اس موضوع پر بات کرتے ہوئے مزید لکھا کہ ’اگلا میچ نیوزی لینڈ کے ساتھ ہے۔ یاد رہے انہوں نے پاکستان کا دورہ کینسل کیا تھا۔ کچھ ہفتے پہلے اپنی ٹیم واپس بُلا لی تھی۔ پاکستان بمقابلہ نیوزی لینڈ پاکستان اور انڈٰیا کے میچ سے زیادہ اہم ہے۔
جہاں صارفین پاکستان کے نیوزی لینڈ سے ہونے والے میچ پر اپنے خیالات کا اظہار کر رہے ہیں وہیں کچھ صارفین کرکٹ شائقین کی رائے کچھ الگ انداز میں جاننے کی کوشش کر رہے ہیں۔ سوشل میڈیا یوزر صائمہ اخلاق لکھتی ہیں ہیں کہ ’آج کے دن نیوزی لینڈ کے لیے بڑا خطرہ کون ہو گا، بابر اعظم یا شاہین آپ کی کیا رائے ہے؟

واضح رہے نیوزی لینڈ کی ٹیم نے 17 ستمبر کو راولپنڈی میں ہونے والے پہلے میچ سے محض چند گھنٹے قبل سکیورٹی وجوہات کو جواز بناتے ہوئے دورہ پاکستان منسوخ کر دیا تھا۔

شیئر: