برطانیہ میں کنٹینر سے 39 لاشیں برآمد

پولیس نے شمالی آئرلینڈ سے تعلق رکھنے والے 25 سالہ ڈرائیور کو گرفتار کر لیا ہے (فوٹو: روئٹرز)
برطانوی پولیس کا کہنا ہے کہ انہیں بدھ کو لندن کے قریب ایک ٹرک کے کنٹینر میں 39 لاشیں ملی ہیں، واقعے کی تحقیقات کے لیے ٹرک ڈرائیور کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔
برطانوی خبر رساں ایجنسی روئٹرز کے مطابق خیال کیا جارہا ہے کہ ٹرک ہفتے کو بلغاریہ سے روانہ ہوا اور ویلز کے علاقے ہولی ہیڈ کے ذریعے برطانیہ میں داخل ہوا۔
پولیس کا کہنا ہے کہ انہوں نے شمالی آئرلینڈ سے تعلق رکھنے والے 25 سالہ ڈرائیور کو گرفتار کرلیا ہے۔
چیف سپرنٹنڈنٹ اینڈریو مارینر نےکہا ہے کہ ’ یہ ایک افسوسناک واقعہ ہے جس میں لوگوں کی بڑی تعداد نے اپنی زندگیاں کھو دی ہیں۔ ہم متاثرین کی شناخت کر رہے تاہم اس میں وقت لگ سکتا ہے‘۔
انہوں نے مزید بتایا کہ ’ہم نے ٹرک ڈرائیور کو حراست میں لیا ہے جو تحقیقات مکمل ہونے تک پولیس کی تحویل میں رہے گا‘۔

 39 لاشوں میں 38 بڑی عمر کے افراد اور ایک نوعمر شامل ہے، فوٹو: سوشل میڈیا

پولیس نے بدھ کے روز لندن کے وسط سے 20 میل دور اور دریائے ٹیمز کے قریب گریز کے علاقے میں واقع واٹر گلیڈ انڈسٹریل پارک سے یہ لاشیں برآمد کیں۔ ان 39 لاشوں میں 38 بڑی عمر کے افراد اور ایک نوعمر بھی شامل ہے۔
برطانیہ کے وزیراعظم بورس جانسن نے واقعے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ایسیکس میں کنٹینر سے 39 لاشیں برآمد ہونے پر حیرت زدہ ہیں۔ ’مجھے محکمہ داخلہ سے معاملے کے حوالے سے مسلسل تازہ ترین اطلاعات موصول ہو رہی ہیں اور میں ایسیکس پولیس کے ساتھ مل کر کام کروں گا جیسے ہی ہمیں معلوم ہوجاتا ہے کہ اصل میں ہوا کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ’میری تمام تر ہمدردریاں اس واقعے میں ہلاک ہونے والوں اور اپنے پیاروں کو کھو دینے والوں کے ساتھ ہیں۔‘
برطانیہ کی وزیرداخلہ پریتی پٹیل نے بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں لکھا ہے کہ ’گرے میں پیش آنے والے اس افسوسناک واقعہ پر غمگین اور صدمے میں ہوں‘۔

شیئر: