Sorry, you need to enable JavaScript to visit this website.

غیر ملکی کے ماسک کا مذاق اڑانے اور حملے پر شہری گرفتار

سعودی پبلک پراسکیوشن نے واقعہ کا نوٹس لیا تھا اور کارروائی کا حکم بھی دیا (فوٹو: سوشل میڈیا)
 سعودی وزارت داخلہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ غیرملکی ملازم پر حملے اور اس کے ماسک کا مذاق اڑانے پر مقامی شہری کو گرفتار کرلیا گیا۔
 سوشل میڈیا پر کپڑے کا ماسک استعمال کرنے پر غیرملکی کا مذاق اڑانے اور اس کے ساتھ مارپیٹ کا وڈیو کلپ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے پرسعودی پبلک پراسکیوشن نے واقعہ کا نوٹس لیا ہے۔
پولیس کو تحقیقات کرکے مذاق اڑانے اور زدوکوب کرنے والے شہری کی گرفتاری کا حکم جاری کردیا۔
سبق ویب سائٹ کے مطابق پبلک پراسکیوشن کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ ادارے کے اہلکاروں نے سوشل میڈیا پر وائرل ایک وڈیو کلپ کے بارے میں رپورٹ پیش کرکے بتایا کہ ایک مقامی شہری شماغ کے کپڑے سے بنا ماسک استعمال کرنے پر مقیم غیرملکی کا مذاق اڑا رہا ہے اور اسے زدوکوب بھی کر رہا ہے۔ پبلک پراسیکیوشن نے اس کا نوٹس لے لیا۔
فوجداری قانون کی دفعہ 15 اور 17 کے  مطابق پبلک پراسیکیوشن نے حکم جاری کیا کہ غیرملکی کا مذاق اڑانے اور اسے زدوکوب کرنے والے کو تلاش کرکے گرفتار کیا جائے۔ مقامی شہری نے جو کچھ  کیا ہے وہ مفاد عامہ کے بھی خلاف ہے۔ متعلقہ شخص کی شناخت کرکے اسے قانونی کارروائی کے لیے پبلک پراسیکیوشن کے حوالے کیا جائے۔

پبلک پراسیکیوشن نے شہریوں سے اپیل کی کہ وہ ذمہ دارای کا مظاہرہ کریں (فوٹو: سوشل میڈیا)

پبلک پراسکیوشن کے عہدیدار نے تمام شہریوں سے اپیل کی کہ وہ ذمہ دارانہ جذبے کا مظاہرہ کریں۔ سماجی آداب کا احترام کریں۔ انسانی وقار اور اغیار کے ساتھ معاملات سے متعلق مذہب کی ہدایات پر عمل کریں۔
پبلک پراسکیوشن کے عہدیدار نے مزید کہا کہ معاشرے کے امن و سلامتی کے منافی ہر سرگرمی پر ہماری نظر ہے جو شخص بھی کسی کے وقار کے منافی کوئی ایسی حرکت کرتا ہوا پایا جائے گا جس پر قانونی طور پر گرفت ہوسکتی ہے۔ اسے متعلقہ قوانین کے مطابق حراست میں لے کر نشان عبرت بنایا جائے گا۔

شیئر: